Page 3 of 4 FirstFirst 1234 LastLast
Results 21 to 30 of 34

Thread: پپو جی کی آب بیتاں

  1. #21
    T.nasreen is offline Khaas log
    Join Date
    Sep 2017
    Age
    18
    Posts
    59
    Thanks
    4
    Thanked 46 Times in 29 Posts
    Time Online
    19 Hours 1 Minute 41 Seconds
    Avg. Time Online
    5 Minutes 22 Seconds
    Rep Power
    7

    Default

    Very nice, please try to update very quickly. Very good beginning

  2. The Following 3 Users Say Thank You to T.nasreen For This Useful Post:

    abba (10-04-2018), abkhan_70 (10-04-2018), Pappu Ji (08-04-2018)

  3. #22
    Irfan1397's Avatar
    Irfan1397 is offline super moderator
    Join Date
    Sep 2011
    Location
    Sahiwal
    Posts
    7,532
    Thanks
    26,200
    Thanked 38,346 Times in 7,325 Posts
    Time Online
    1 Month 2 Weeks 19 Hours 38 Minutes 3 Seconds
    Avg. Time Online
    28 Minutes 6 Seconds
    Rep Power
    3129

    Default

    Quote Originally Posted by Pappu Ji View Post
    بہت شکریہ عرفان بھائی ۔ آپ کی تعریف سے حوصلہ ملا ہے ۔ آپ ویسے بھی ہر لکھنے والے کو بہت حوصلہ دیتے ہیں ۔
    dear pappu ji update ka wait rahy ga

  4. The Following 3 Users Say Thank You to Irfan1397 For This Useful Post:

    abkhan_70 (10-04-2018), Pappu Ji (11-04-2018), shubi (12-04-2018)

  5. #23
    Pappu Ji is offline Aam log
    Join Date
    Feb 2015
    Posts
    10
    Thanks
    23
    Thanked 38 Times in 6 Posts
    Time Online
    4 Days 10 Hours 54 Minutes 52 Seconds
    Avg. Time Online
    5 Minutes 32 Seconds
    Rep Power
    6

    Default

    قسط نمبر 2

    اُس مُلاقات کے اگلے دن صبح 11 بجے کا ٹائم تھا کہ میرے موبائیل پے ایک میسج آیا یہ میسج مائیرا کا تھا لکھا کہ اگر فری ہو تو کال بیک کرو۔ میں اس ٹائم فری تھا اور آفس میں اکیلا تھا تو فورا کال ملا دی جو کہ مائیرا نے فورا اُٹھا لی ۔ سلام دعا کے بعد بولی کہ پپو جی کل سے کیا جادو کر دیا ہے میں تو ابھی تک ہواووں میں ہی اُڑ رہی ہوں ۔ ایسا مزہ پہلی بار ملا ہے ۔ مجھے کل کی ملاقات میں اندازہ تو ہو گیا تھا کہ اس سے پہلےمائیرا کو کوئی سیکس کا تجربہ نہیں ہے پھر اس نے خود بھی بتا دیا کہ کل پہلی بار کسی مرد کا ہاتھ اس کو لگا جس وجہ سے وہ بہت جلدی فارغ ہو گئی تھی ۔ میں نے کہا کہ تُم نے تو مزے لے لیے پر میں تو ادھورا ہی رہ گیا نہ ۔ پھر ہم نے سیکس پر بہت بات کی اس نے ٹرپل ایکس موویز تو دیکھی ہوئی تھی لیکن پھر بھی ڈرتی تھی ۔ میں نے اس کا حوصلہ بڑھایا کہ ڈرنے کی کیا بات ہے ہر لڑکی کی زندگی میں یہ موقع ضرور آتا ہے ۔ خیر وہ راضی تو ہو گئی پر کہنے لگی کہ اگر مجھے زیادہ درد ہوا تو تم فورا مجھے چھوڑ دو گے اور کچھ نہیں کرو گے ، میں نے بھی حامی بھر لی لیکن مجھے معلوم تھا کہ بس ایک بار لن پھدی کے اندر چلا جائے تو پھر کون باہر نکالتا ہے اورلن بھی پھدی کے اندر جاتے ہی لڑکی بھی لن کو بایر نکالنے نہیں دیتی ہے ۔



    پھر تقریبا روز ہی ہماری بات ہونے لگی اور ہم سیکس کے مختلف پوزیشنز پر بات کرتے تھے اس نے بتایا کہ اس کو کون کونسی پوزیشنز پسند ہیں اور پھدی لکنگ اور لن سکنگ کے بارے میں بھی بات کی وہ بھرپور انجوائے کرنا چاہتی تھی ۔ وہ ذہنی طور پر بلکل تیار ہو گئی کہ اس مُلاقات میں ہم بھرپور سیکس کریں گے ( مگر شرط وہی تھی کہ اگر اس کو زیادہ درد ہوا تو میں کچھ نہیں کروں گا ) ۔ مائیرا لنڈ اور پھدی کے نام نہیں لیتی تھی تو میں نے اس کو کہا کہ ان کے نام لے تو کچھ عرصے میں وہ لنڈ اور پھدی کے نام بھی لینے لگ گئی تھی ، وہ خود بھی آج کل سیکس کے متعلق سوچتی تھی اور سیکس کرنا بھی چاہتی تھی ، کیونکہ حرا جب اس کو اپنے اور شہزاد کے بارے میں بتاتی تھی تو وہ کیسے سیکس کرنے ہیں اور مختلف پوزیشنز کا بتانی تھی تو سن کے مائیرا خود بھی گرم ہو جاتی تھی ۔ دل سے وہ بھی چاہیتی تھی کہ وہ بھی سیکس کرے تو اب موقع مل رہا تھا تو وہ بھی ایکسائیڈڈ ہو رہی تھی ۔

    خیر کوئی 25 دن کے بعد دوبارہ ملنے کا پروگرام بن گیا اور وہ دونوں شہزاد کے گھر آ گئیں ، کچھ دیر بیٹھ کے شہزاد تو حرا کو لے کے الگ روم میں چلا گیا ۔ اب میں اور مائیرا اکیلے کمرے میں تھے۔ آج مائیرا نے بلیک کلر کا سوٹ پہنا ہوا تھا۔ جو کہ فل فٹنگ والا تھا جس میں اس کا گورا جسم اور 36 کے ممے اور 36 کی گانڈ قیامت ڈھا رہی تھی ۔ وہ صوفے پے بیٹھی ہوئی تھی تو میں نے پہلے کمرے کو لاک کیا اور مائیرا کو صوفے سے اُٹھا کے گلے سے لگا لیا۔ اس کے 36 کے ممے میرے سینے سے چپکے ہوئے تھے ۔ میرے ہاتھ اس کی کمر پے چل رہے تھے اور مائیرا نے بھی اپنے ہاتھوں سے مجھے کمر کے گرد پکڑا ہوا تھا ۔ آج وہ خود بھی ساتھ دے رہی تھی ۔ میں نے پہلے اس کے ہونٹوں کو جکڑ لیا اور پنک رس بھرے ہونٹوں کا رس پینے لگ گیا ۔ ساتھ ساتھ اپنے ھاتھ اس کی 36 کی گانڈ پے رکھ لیے اور گانڈ کو دبانے لگا ۔ اس کی گانڈ بہت ہی نرم تھی جیسے روئی ہو ۔ وہ بھی میری کس کا بھر پور ساتھ دے رہی تھی اور میری زبان کو اپنے منہ میں لے کے چوس رہی تھی ۔ میں مزے کی شدت میں ڈوبتا جا رہا تھا اور دوسری طرف میرے لنڈ نے انگڑائی لی اور کھڑا ہونا شروع ہو گیا ۔ میں اپنے ایک ہاتھ سے اس کی گانڈ دبا رہا تھا اور دوسرا ہاتھ میں نے اس کی قمیض کے اندر ڈال لیا تھا اور اس کی ننگی کمر پے پھیرنا شروع کر دیا ۔



    میں اس وقت ہر طرف سے مزے میں تھا اس کے ممے میرے سینے میں دبے ہوئے تھے ایک ہاتھ سے اسکی سیکسی نرم گانڈ کو دبا رہا تھا دوسرا ہاتھ ننگی کمر پے تھا اور ہونٹوں سے میں مائیرا کے ہونٹوں کا رس پی رہا تھا ۔ اب میں نے اسکی زبان کو قابو میں کر لیا ۔ کیا مست زبان تھی مزا آگیا ، اب مائیرا کا جسم ہلکا سا کانپنے لگا ۔ اس نے کہا کہ پپوجی اب مجھ سے کھڑا نہیں ہوا جا رہا تو میں نے اس کو بیڈ کے درمیان میں لیٹا لیا اور ساتھ ہی اس کےاوپر آگیا ۔ اس کے 36 سائیز کے ممے میرے نیچے دبے ہوئے تھے ۔ اور میرا کھڑا ہوا لنڈ پینٹ کے اندر سے ہی اس کی پھدی کو ٹچ کر رہا تھا ۔اب میں نے دوبارہ سے مائیرا کے ہونٹوں کا رس چوسنا شروع کر دیا اور وہ بھی دیوانہ وار مجھے کس کر رہی تھی اب یہ سمجھ نہیں آ رہی تھی کہ وہ زیادہ جوش میں کس کر رہی ہے یا میں ۔ وہ اب میری زبان اپنے منہ میں لے کے بڑ ے ہی سرور کے ساتھ چوس رہی تھی جیسے جیسے وہ میری زبان چوس رہی تھی تو میں مزے کی دُنیا میں گُم ہوتا جا رہا تھا ۔ اب میں نے اپنے ایک ھاتھ کو اس کی قمیض کے اندر ڈال کے مموں اور نپلز کو سہلانا شروع کر دیا ۔ جب میں نے اس کے نپلز کے ساتھ کھیلنا شروع کیا تو وہ فل گرم ہو گئی اور اپنے دونوں ہاتھوں کو میری کمر کے گرد ڈال کے مظبوطی سے پکڑ لیا ۔ اب میں اس کے اوپر سے اتر کے سائیڈ پے لیٹ گیا اور اپنا دوسرا ہاتھ اس کی شلوار کے اندر ڈال دیا اس نے الاسٹک ڈالا ہوا تھا اس لیے مجھے شلوار میں ہاتھ ڈالنے میں کوئی پریشانی نہیں ہوئی ۔ مائیرا نے پینٹی نہیں پہنی ہوئی تھی اس لیے میرا ہاتھ سیدھا ہی پھدی پے جالگا ۔ جب میرا ہاتھ اس کی پھدی کے ہونٹوں کو ٹچ ہوا تو مجھے اچھا لگا کہ اس کی پھدی بلکل صاف ستھری تھی ۔ تازہ بال صاف کیے ہوئے لگتے تھے ۔ مجھے ویسے بھی صاف شفاف پھدی پسند ہے ۔ ( جو کہ میں نے اس کو پہلے بھی بتایا تھا جب فون پر بات ہوتی تھی) اس کی پھدی سے گرم گرم پانی نکل کے پھدی کے ہونٹوں پے لگا ہوا تھا ۔ جیسے ہی میرا ہاتھ اس کی پھدی پے لگا تو مائیرا کو ایک جھٹکا لگا اور ہولے ہولے کانپنے لگی ۔



    اب میں نے اپنی ایک انگلی کو پھدی کے ہونٹوں پر پھیرنا شروع کر دیا کوئی 5 منٹ تک میں پھدی پر انگلی پھیرتا رہا ۔ اب اس کے منہ سے سیکسی آوازیں آنا شروع ہو گئی تھی آہ ہ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ اف ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ممممممممممم ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔اففففففففففف ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ آہ آہ آہ آہ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ جس سے میں مزید جوش میں آ گیا اور وہ بھی بہت مزے میں لگ رہی تھی کیونکہ اس نے میری زبان ابھی تک اپنے منہ میں رکھی ہوئی تھی اور چوس رہی تھی ۔ میں نے ایک ہاتھ سے پینٹ کی زپ کھول کے انڈر وئیر سے اپنا لنڈ جو کہ بری طرح اکڑ چکا تھا اور شدید گرم ہو گیا تھا باہر نکال لیا اور مائیرا کا ایک ہاتھ پکڑ کے اپنے لنڈ پر رکھ دیا وہ یک دم چونک گئی اور فورا میرے لنڈ کو دیکھا جو کہ فل اکڑ کے 6 انچ کا ہو چکا تھا ۔ میرے لنڈ کو دیکھ کے بولی کہ پپو جی یہ کیسے میری پھدی کے اندر میں جائے گا ۔ اس دوران بھی اس نے لنڈ سے اپنا ہاتھ نہیں اُٹھایا تھا بلک نرم نرم ہاتھوں سے میرے لنڈ پے مساج کر رہی تھی ۔ میں نے کہا کہ بہت آرام سے تمہاری پھدی کے اندر چلا جائے گا تمہیں پتا بھی نہیں چلے گا ۔



    اب میں نے کہا کام سٹارٹ کیا جائے تو میں نے پہلے اس کی قمیض پکڑ کے اوپر کی تو اس نے اپنے ہاتھ بھی اوپر کر لیے اور مجھے قمیض اتارنے میں مدد کی ۔ پھر میں نے بھی فورا اپنی شرٹ اور بنیان اتار دی اب میں اوپر سے بلکل ننگا اور وہ اوپر صرف برا میں تھی ۔ اس نے اج بھی بلیک کلر کا برا پہنا ہوا تھا اور گورے رنگ پے بلیک برا میں پھنسے ہوے 36 سائیز کے ممے کیا قیامت ڈھا رہے تھے جو الفاظ میں بیان کرنا ممکن نہیں ہے ۔ پھر میں نے اس کو سینے سے لگایا اور ہاتھ پیچھے لے جا کے برا کا ہک کھول دیا اور پیچھے ہو گیا اور پھر جیسے ھی برا اتری تو بڑے بڑے ممے یک دم اچھل کے میرے آنکھوں کے سامنے آ گیے ۔ میں نے اس کو لٹایا جیسے ہی میں اس کے اوپر آیا تو مجھے مائیرا کے جسم سے بہت ہی بھینی بھینی خوشبو آئی ، اس نے بہت ہی اچھا باڈی سپرے لگایا ہوا تھا ۔ جس سے میری شہوت میں اور اضافہ ہو گیا تھا ۔ اور اس کے ساتھ ہی میں نے اس کے مموں پر دھاوا بول دیا کبھی ایک ممے کو منہ میں لیتا کبھی دوسرے کو کبھی ایک نپل کو دانتوں سے ہلکا سا کاٹتا کابھی دوسرے کو اس سے یہ مزہ برداشت نہیں ہو رہا تھا اور بہت تیز تیز آوازیں نکلنا شروع ہو گئی تھی ۔ پھر میں آہستہ آہستہ اس کے پیٹ پے زبان پھیرتا ہوا نیچھے کی طرف آنے لگا ۔ اور سارے پیٹ پے پیار کرنا شروع کر دیا اس کا سارا پیٹ میرے تھو ک سے گیلا ہو گیا تھا ۔ اور ہاتھوں سے میں اس کے مموں کو دبا بھی رہا تھا ۔ پھر میں نے اس کو کہا کہ الٹی ہو جاو تو وہ الٹی ہو گئی ۔ اب اس کی گوری گوری بے داغ کمر میرے سامنے تھی میں نے اپنی ٹانگیں دونوں سائیڈز پر کیں اور اس کی گانڈ پر بیٹھ گیا ۔ اور اس کی گردن سے پیار کرنا شروع کر دیا شولڈرز کمر کی لکیر اور ساری کمر پے پیار کرتا رہا اور وہ مزے میں شرابور ہائے ہائے کر رہی تھی ۔



    اب میں تھوڑا نیچھے ہوا اور شلوار کو تھوڑا سا نیچھے کر دیا جس سے اس کی گوری چٹی گانڈ میرے سامنے آ گئی میں نے اس کی گانڈ کی لکیر پے اپنی زبان پھیری تو اس نے ایک جھر جھری لی اب میں نے اس کے دونوں ہپس پے پیار کرنا شروع کیا مجھے بہت مزا آ رہا تھا نرم نرم گانڈ پے میری زبان پھر رہی تھی اور پھر میں نے اس کو تھوڑا سا اوپر کیا اور ساری شلوار اتار دی اب وہ بلکل ننگی میرے سامنے لیٹی ہوئی تھی اس کا سارا جسم بلکل شیشے کی طرح شفاف لگ رہا تھا ۔ میں نے اپنی بھی پینٹ اور انڈر وئیراُتار دیا اب ہم دونوں بلکل ننگے تھے میں اس کے اوپر ہی لیٹ گیا جس سے میرا فل تنا ہو لنڈ اس کی گانڈ کی لکیر میں پھنس گیا ۔ نرم نرم گانڈ میں میرا لنڈ واوووو ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ کیا مزا تھا دل چاہ رہا تھا کہ وقت بس یہیں رک جاے ۔ پر مجھے ٹائم کا بھی احساس تھا کہ کچھ جلدی کی جائے ۔



    پھر میں نے اس کو سیدھا کیا تو اس نے اپنی آنکھیں بند کی ہوئی تھیں ۔ معلوم نہی کہ شرم سے یا مزے سے ۔ میں نے اس کے ہونٹوں سے پیار کرنا شروع کیا اور پھر گال پے گلے پر شولڈرز پے پیار کیا پھر باری باری دونوں مموں کو پیار کیا نپلز پر بائیٹ کی پھر پیٹ پر پیار کرتا ہوا نیچھے پھدی تک آ گیا ۔ مائیرا کی کنواری پھدی کا رنگ بھی پنک تھا اور پھدی کے لب آپس میں جڑے ہوئی تھے ، بس ایک لکیر نظر آ رہی تھی جیسے پھدی کو دو حصوں کو درمیان سے بہت ہی نفاست کے ساتھ کسی باریک نشتر سے کٹ لگایا گیا ہو ۔ اور پھدی کے لب پر پھدی سے نکلا ہوا پانی لگا چمک رہا تھا ۔ اس کی پھدی سے کیا زبردست مہک آ رہی تھی جس نے مجھے مدہوش کر دیا تھا ۔ مائیرا کا اوپر کا سارا جسم میرے تھوک سے گیلا ہواوا تھا ۔ اب میں نے اس کی پھدی کے ہونٹوں پے اپنی زبان لگائی تو مائیرا کو جیسے کرنٹ لگ گیا ۔ ایک بہت ہی زبردست قسم کا جھٹکا لگا لیکن میں اپنے کام میں مشغول رہا اور پھدی کو اپنی انگلیوں سے تھوڑا سا کھولا تو پھدی کے بلکل اوپر کی طرف مٹر کے دانے سے بھی چھوٹا ایک دانہ تھا تو میں دانے پر زبان کو رگڑنے لگا ۔ ۔اب مائیرا کا جسم جھٹکے کھانے لگا ۔ پھدی پوری طرح گرم ہو کے گیلی ہو چکی تھی ۔ پھر میں نے ایک انگلی پھدی کے اندر کر دی جو کہ فورا ہی پھنس گئی کیونکہ پھدی بہت ٹائیٹ تھی ۔ میں نے انگلی تھوڑی سی اور اندر کی تو مائیرا کی درد بھری آواز نکلی اور بولی کہ پپو رک جاو تو میں فورا رک گیا ۔ لیکن زبان دانے پے رگڑنی جاری رکھی ۔ اور انگلی جتنی اندر تھی اتنی ہی اندر باہر کرنے لگا ۔ جس سے اس کو بہت مزا آ رہا تھا اورجو کہ اس کی آوازوں سے پتہ چل رہا تھا کہ وہ کتنے سرور میں ہے ۔ بہت ہی سیکسی آوازیں نکل رہی تھی آہ آہ آہ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ اف ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ممممممممممم ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔اففففففففففف ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ آہ آہ آہ آہ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ جس سے مجھے بھی جوش چڑھ رہا تھا میں اور زور زور سے اس کے دانے کو رگڑنے لگا ۔ میں نے نظر اُٹھا کے دیکھا تو اس کا ایک ہاتھ تو میرے سر پے تھا اور دوسرے ہاتھ سے وہ اپنے مموں اور نپلز کو مسل رہی تھی ۔ پھر اسکا جسم اکڑنے لگا اور شدید جھٹکےکھانے لگا وہ بولی پپو جی اور زور زور سے زبان رگڑو میں نے اور زور و شور سے زبان رگڑنا شروع کر دی اور ساتھ ہی انگلی بھی زور سے اندر باہر کرنے لگا ۔ پھر تھوڑی دیر بعد ہی پھدی سے گرم گرم پانی کا فوارہ نکلا جو کہ میرے منہ میں آ گیا ۔ بہت ہی ٹیسٹی پانی تھا اس کی پھدی کا ۔ جو اس وقت مجھے کسی بھی مشروب سے بھی زیادہ مزیدار لگ رہا تھا ۔ میں اس وقت تک پھدی کو چاٹتا رہا جب تک کہ پھدی سے سارا پانی نکل گیا ۔ پھر میں نے اپنے منہ کو ٹشو سے اچھی طرح صاف کیا اور مائیرا کے ساتھ لیٹ گیا ۔ اور پھر میں نے اپنا سر اس کے مموں پر رکھ لیا ۔ تھوڑی دیر کے بعد جب اس کے سانس بحال ہوئے تو اس نے پیار سے میرے سر کو پکڑ کے اپنے مموں پے دبا دیا ۔



    پھر میں نے کہا کہ اب تمہاری باری ۔ تو وہ مسکرائی اور مجھے لٹا کے میرے اوپر آ گئی ۔ پہلے تو اس نے میرے ہونٹوں پے کس کی پھر گردن اور پھر میرے سینے پے آ گئی ۔ میرے نپلز کو اپنی زبان سے چاٹنے لگی ۔ یہ میری بہت بڑی کمزوری تھی ۔ جس سے میرے منہ سے سیکسی آوازیں نکلنے لگ گئیں آہ آہ آہ ۔ ۔ ۔ ۔ اُففففففففف ۔ ۔ ۔ ۔ اوہ اوہ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ممممممممممممممم ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ یہ آوازیں سن کہ مائیرا کو بھی جوش چڑھ گیا اور وہ بھی زور زور سے میرے نپلز کو چاٹتی رہی ، مجھے بہت مزہ آ رہا تھا ۔ میں اپنے ہاتھ مائیرا کی گانڈ پے پھیر رہا تھا ۔ میرا لنڈ سیدھا کھڑا تھا جو کہ اس کی پھدی کے اوپری حصے کو ٹچ کر رہا تھا ۔ جس سے وہ بھی مست ہو رہی تھی ۔ اور میں تو مزے میں تھا ہی ۔ پھر وہ کچھ دیر میرے نپلز کو چاٹتی رہی پھر میرے پیٹ پے آ گئی سارے پیٹ پے پیار کی نشانیاں بناتی ہوئی اور نیچے لنڈ پے آ گئی اور لنڈ کی اپنے ہاتھ میں لے لیا ۔ اور غور غور سے میرے لنڈ کو دیکھنے لگی ۔ میں نے پوچھا کہ کیا دیکھ رہی ہو تو بولی کہ جب ایک انگلی پھدی کے اندر گئی تو مجھے درد ہوا تھا اور جب یہ سارا لنڈ میری پھدی کے اندر جائے گا تو کیا ہوگا ۔ مجھے تو ڈر لگ رہا ہے ۔ میں نے پھر اس کی ہمت بندھائی کہ کچھ نہیں ہوگا اس کے بارے میں زیادہ نا سوچو ۔ اور جلدی سے لنڈ کو پیار کرو اس نے پہلے میرے لنڈ کوبڑے پیار سے دیکھا اور پھر لنڈ کی ٹوپی پر اپنی زبان لگا دی مجھے ایسا لگا جیسے مرے پورے جسم میں کرنٹ دوڑ گیا ہو ۔ سارے بدن میں سرور کی لہریں دوڑنی شروع ہو گئی تھی ، اب اس نے پوری ٹوپی پے زبان گول گول گھمانی شروع کر دی ۔ اور ہاتھ سے میرے ٹٹے کو آرام سے مسلنے لگی ۔ میں تو ہوا میں اڑنا شروع ہو گیا پھر اس نے زبان نیچھے لے جا کہ لنڈ کی جڑ سے اوپر تک پھیری آآآآا ہ ہ ہ ہ ہ ۔ ۔ ۔ کیا مزا آیا ۔ 2 ، 3 بار ایسا کرنے ک بعد اس نے اپنا منہ بلکل میرے لنڈ کے اوپر لے آئی اور ٹوپی کو اپنے منہ میں لے لیا اور منہ کو اوپر نیچے کرنے لگ گئی ۔ مزے سے میری آنکھیں بند ہو گئیں تھیں میرے ہاتھ مائیرا کے سر پے تھے اور میں اس کے سر کو آرام سے اپنے لنڈ پے دبا رہا تھا ۔ اب مائیرا نے میرا آدھا لنڈ اپنے منہ میں لے لیا تھا وہ اچھی طرح تو نہیں کر پا رہی تھی لیکن پھر بھی مزا آ رہا تھا کبھی کبھی اس کے دانت لگ رہے تھے تو میں نے اس کو کہا کہ دانت بچا کے چوسو تو وہ احطیاط سے سککنگ کرنے لگی ۔ اب مجھے بہت مزا آ رہا تھا میں تو فضاووں میں کہیں گھوم رہا تھا ۔



    پھر کچھ دیر کے بعد میں نے اس کا روکا اور سیدھا لیٹنے کو کہا اسکی گانڈ کے نیچے تکیہ رکھ دیا اور کہا اب تیار ہو جاو ۔ پہلے میں نے اپنی ایک انگلی پے زیتون کا تیل لگایا (میں نے زیتون کے تیل کا پہلے سے ہی بندوبست کیا ہوا تھا ۔) اور اس کی اس کی پھدی میں ڈال دی تاکہ پھدی کچھ نرم ہو جاے ویسے تو اس کی پھدی اس کے ہی پانی سے بھری ہوئی تھی ۔ جب میری انگلی کچھ رواں ہوئی تو میں نے اپنے لنڈ کو اچھی طرح زیتون کے تیل میں بھگولیا اور اس کی ٹانگیں کھول کے درمیان میں آ گیا اور ارام سے لنڈ کی ٹوپی کو پھدی پے سیٹ کر لیا ۔ مائیرا تھوڑی گھبرائی ہوئی تھی اس کا جسم ہولے ہولے کانپ بھی رہا تھا ۔ خیر میں مے نے تھوڑا سا زور لگاکے لنڈ کی ٹوپی پھدی میں ڈال دی اور وہیں رک گیا ۔ جیسے ہی ٹوپی اندر گئی مائیرا کی ہلکی سے آواز نکل گی ۔ لیکن اس نے کچھ نہیں کہا ۔ پھر میں نے لنڈ کو تھوڑا اور پش کیا اور لنڈ ایک جگہ آکے کسی رکاوٹ سے ٹکرا کے رک گیا ۔ یہ اس کے کنوار پن کی نشانی تھی ۔ اس کی پھدی بہت ٹائیٹ تھی میرا لنڈ اندر ایسے تھا جیسے کسی نے اس کو جکڑ رکھا ہو ۔ اس کے چہرے پے کچھ درد کے آثار تھے لیکن وہ برداشت کر رہی تھی ۔ پھر میں نے اس کو کہا کہ اب تھوڑا سا درد ہوگا برداشت کرنا اور میں نے اس کے ہونٹو ں کو اپنے ہونٹوں میں قید کر لیا اور ایک دھکے سے لنڈ کو اندر پش کیا تو لنڈ رکاوٹ توڑتا ہوا اس کی بچا دانی سے جا ٹکرایا ۔ اس کے منہ سے ایک چیخ نکلی جو کہ میرے منہ میں ہی دب گئی ۔ اور اس کے ناخن میری کمر میں چبھ گئے ۔ وہ نیچے مچل رہی تھی لیکن چونکہ میرا پورا وزن اس پر ھی تھا جس وجہ سے اس کو زیادہ موقع نہیں مل رہا تھا ہلنے کا ۔



    میں بھی رکا ہوا تھا بلکل بھی نہیں ہل رہا تھا ۔ کچھ دیر ایسے ھی گزر گئی تو اسنے نیچے سے ہلنا شروع کیا جیسے کہ رہی ہو کہ میں لنڈ کو ہلاوں تو میں نے لنڈ کو باہر کی طرف نکالا اور واپس اندر کر دیا اس کے منہ سے پھر ہلکی سے آواز نکلی ۔ پھر میں نے لنڈ کو اند باہر کرنا جاری رکھا مگر آرام آرام سے اور ساتھ ھی ہاتھوں سے اس کے مموں کو بھی دبا رہا تھا اور نپلز کو مسل رہا تھا جس سے اس کو مزا بھی آرہا تھا ۔ اب وہ بھی اپنی گانڈ ہلا ہلا کے مجھ آگے بڑھنے کا کہ رہی تھی تو میں نے زور زور سے لنڈ اندر باہر کرنا شروع کیا تو اس کے منہ سے اب مزے کی آوازیں نکلنی شروع ہو گئی تھیں ۔ اب وہ بھی اپنی گانڈ اٹھا اٹھا کے لنڈ کو لے رہی تھی ۔ اب میں نے پھدی میں اپنے گھسوں کی رفتا تیز کر دی تھی اب چونکہ اس کی پھدی بھی پانی سے بھری ہوئی تھی اور دوسرا میرے لند پر بھی زیتون کا تیل تھا تو اب میرا لنڈ کچھ روانی سے پھدی میں اندر باہر ہو رہا تھا ۔ لیکن اب مائیرا پھر پور طریقے سے چدائی کا مزا لے رہی تھی اس کے ہاتھ میری کمر پے پھر رہے تھے ۔



    پھر میں رک گیا اور اپنا لنڈ اس کی پھدی سے باہر نکال لیا تو وہ چونک گئی اور پوچھا کہ کیا ہوا ۔ تو میں نے مسکرا کے کہا کچھ نہیں بس ریسٹ کر رہا تھا ۔ اور پھر میں نے اپنے لنڈ پے کندوم چڑھا لیا ۔ اب میں نے دوبارہ پھدی میں گھسے لگانے شروع کر دیے ، اب میں نے اپنے گھسوں کی رفتا کچھ تیز کر دی اس وقت ہم دونوں ہی بہت مزے لے رہے تھے ۔ پھر مجھے لگا اس کا اس کا جسم جھٹکے لینا شروع ہوا ہے تو میں نے مزید گھسے مارے تو 10 ، 15 گھسوں کے بعد مائیرا نے اپنا پانی چھوڑ دیا ۔ تو میں نے سوچا کہ اب پوزیشن چینج کی جائے اور لنڈ باہر نکال کے مائیرا کوایسے لٹایا کہ اب وہ گانڈ تک بیڈ پے اور ٹانگیں نیچے لٹک رہی تھی ، میں نے دوبارہ لنڈ پھدی کے اندر ڈالا تو مائیرا کی مزے والی آہ نکل گئی ۔ اب وہ آدھی بیڈ پر تھی اور میں نیچے کھڑا تھا اور ہاتھ مائیرا کے مموں پے تھے اور گھسے مارنا شروع کر دیے مائیرا کا جسم پھر سے اکڑنا شروع ہو گیا اور تیز تیز جھٹکے لینے لگی میں نے بھی اب اپنے گھسوں کی رفتار تیز کر دی تھی اب مائیرا کے منہ سے بے ربط آوازیں نکل رہی تھی اااوووہ ہ ہ ہ ہ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ آ آآآ ہ ہ ہ ہ ہ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ مممممممممم ۔ ۔ ۔ ۔ ۔۔۔ سسسسسسسسسس ۔ ۔ ۔ ۔ آآآآآآ ہ ہ ہ ہ ہ ہ ہ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ وہ بے حد مزے میں تھی اس کی آوازیں سن کے مجھے بھی جوش چڑھ رہا تھا اب اس نے اپنی گانڈ کو بھی زور زور سے ہلانا شروع کر دیا تھا ، پھر اس کے جسم نے جھٹکے کھانے شروع کر دیے اور اپنی گانڈ اٹھا اٹھا کے نیچھے سے دھکے لگا رہی تھی ۔ تو پھر اب میں نے بھی اپنے گھسوں میں اضافہ کر دیا تھا ۔ اور پھر مجھے بھی لگا کہ جیسے میرا سارا خون لنڈ میں آ گیا ہے میں بھی زور زور سے دھکے لگانے لگا اور مائیرا بھی جوش سے ہل رہی تھی اور پھر 10 ، 12 دھکوں کے بعد مائیرا کی پھدی نے ایک بار پھر پانی چھوڑ دیا اور ساتھ ہی میرے لنڈ نے بھی پانی کنڈوم میں نکال دیا ۔ لیکن میں نے دھکے لگانے نہیں روکے جب تک میرا ساری پانی کنڈوم میں نہ نکل گیا ۔ پھر میں ایسے ھی مائیرا کے مموں پے سر رکھ کے لیٹ گیا ۔ ہم دونوں کا سانس چرھا ہوا تھا ۔



    پھر تھوڑی دیر تک ایسے ہی لیٹے رہنے کے بعد میں اٹھا اور دیکھا کہ بیڈ شیٹ پے خون لگا ہوا تھا یہ بھی اچھا تھا کہ آ ج بیڈ شیٹ ڈارک کلر کی تھی اس وجہ سے خون زیادہ نمایاں نہیں تھا پھر میں واش روم گیا اور خود کو صاف کر کے آ گیا جب واپس آیا تو دیکھا کہ تو مائیرا ابھی تک ویسے ھی ننگی آدھی بیڈ پے اور آدھی نیچے لٹکی ہوئی تھی ۔ میں نے اس کو اٹھایا اور کہا کو واش روم سے ہو آئے ۔ جب وہ کھڑی ہوئی تو لڑکھڑا گئی تو میں نے فورا اس کو سہارا دیا اور بیڈ پر بٹھا دیا ۔ اس نے کہا کہ اس کو درد ہو رہا ہے ۔ پھر تھوڑی دیر کے بعد میں نے اس کو سہارا دے کے اٹھایا اور واش روم میں لے گیا ۔ واش روم میں جاکہ مائیرا نے اپنی ٹانگیں دیکھی جو کہ پھدی کے خون سے بھری ہوی تھی خون کو دیکھ کے وہ گھبرا گئی کہ اتنا خون نکل گیا ۔ میں نے مسکرا کے کہا کہ مزا بھی بہت لیا نا تو اتنے مزے کے لیے یہ قربانی ضروری تھی ۔ یہ سن کے وہ بھی مسکرا دی اور پھر میں نے گرم گرم پانی سے اس کی ٹانگون کو دھو دیا ۔ اور پھر باہر آ کے ہم نے ٹائم دیکھا تو ہمیں تقریبا 2 گھنٹے ہو چکے تھے اور اب ان کے جانے کا وقت بھی ہو رہا تھا تو ہم دونوں نے اپنے کپڑے پہن لیے اور صوفے پے بیٹھ گیے ۔ وہ بولی کہ پپو جی شکریہ کہ تم نے بہت احطیاط اور آرام آرام سے کیا مجھے درد تو ہوا لیکن جس پیار سے تم نے کیا اس نے میرا دل جیت لیا ۔ میں نے بھی اس کو کہا کہ رئیلی تمہارے ساتھ پیار کرنے میں بہت مزا آیا ۔ پھر کچھ دیر بعد شہزاد اور حرا بھی آ گئے اور وہ دونوں تھوڑی بعد وہاں سے چلے گئے ۔

    اس بار چونکہ ٹائم بھی کم تھا اور مائیرا کا بھی پہلی بار تھا تو اس لیے ہم صرف ایک بار ہی سیکس کر سکے ۔

    اس قسط کے بارے میں بھی اپنی قیمتی رائے ضرور دیجیے گا۔
    https://www.facebook.com/pappu.ji.54

  6. The Following 11 Users Say Thank You to Pappu Ji For This Useful Post:

    abkhan_70 (15-04-2018), Admin (18-04-2018), ehaq14 (17-04-2018), fahadfraz (18-04-2018), Irfan1397 (14-04-2018), Lovelymale (16-04-2018), Mirza09518 (15-04-2018), mm.khan (15-04-2018), shubi (20-04-2018), suhail502 (17-04-2018), teno ki? (14-04-2018)

  7. #24
    Irfan1397's Avatar
    Irfan1397 is offline super moderator
    Join Date
    Sep 2011
    Location
    Sahiwal
    Posts
    7,532
    Thanks
    26,200
    Thanked 38,346 Times in 7,325 Posts
    Time Online
    1 Month 2 Weeks 19 Hours 38 Minutes 3 Seconds
    Avg. Time Online
    28 Minutes 6 Seconds
    Rep Power
    3129

    Default

    hot and sexy update . Next update zara jaldi plz

  8. The Following 2 Users Say Thank You to Irfan1397 For This Useful Post:

    Pappu Ji (15-04-2018), suhail502 (17-04-2018)

  9. #25
    teno ki? is offline Premium Member
    Join Date
    Feb 2012
    Posts
    330
    Thanks
    481
    Thanked 558 Times in 242 Posts
    Time Online
    1 Week 3 Days 7 Hours 19 Minutes 41 Seconds
    Avg. Time Online
    6 Minutes 33 Seconds
    Rep Power
    42

    Default

    بہت زبردست

  10. The Following 2 Users Say Thank You to teno ki? For This Useful Post:

    Pappu Ji (15-04-2018), suhail502 (17-04-2018)

  11. #26
    mm.khan is offline Premium Member
    Join Date
    Aug 2012
    Posts
    86
    Thanks
    374
    Thanked 255 Times in 84 Posts
    Time Online
    4 Days 1 Hour 26 Minutes 39 Seconds
    Avg. Time Online
    2 Minutes 49 Seconds
    Rep Power
    15

    Default

    Fit........

  12. The Following 3 Users Say Thank You to mm.khan For This Useful Post:

    abkhan_70 (17-04-2018), Pappu Ji (15-04-2018), suhail502 (17-04-2018)

  13. #27
    ehaq14 is offline Premium Member
    Join Date
    Apr 2016
    Age
    20
    Posts
    69
    Thanks
    65
    Thanked 88 Times in 50 Posts
    Time Online
    1 Day 23 Hours 40 Minutes 16 Seconds
    Avg. Time Online
    3 Minutes 48 Seconds
    Rep Power
    21

    Default

    زبردست .

  14. The Following 3 Users Say Thank You to ehaq14 For This Useful Post:

    abkhan_70 (17-04-2018), Pappu Ji (17-04-2018), suhail502 (17-04-2018)

  15. #28
    suhail502's Avatar
    suhail502 is offline Premium Member
    Join Date
    Nov 2008
    Location
    Mainchannu
    Age
    31
    Posts
    2,454
    Thanks
    17,724
    Thanked 9,626 Times in 2,287 Posts
    Time Online
    1 Week 4 Days 11 Hours 24 Minutes 25 Seconds
    Avg. Time Online
    7 Minutes 11 Seconds
    Rep Power
    1107

    Default

    مست ہے با س۔۔۔

  16. The Following 3 Users Say Thank You to suhail502 For This Useful Post:

    abkhan_70 (17-04-2018), Irfan1397 (17-04-2018), Pappu Ji (18-04-2018)

  17. #29
    Zuums is offline Aam log
    Join Date
    Apr 2018
    Age
    43
    Posts
    2
    Thanks
    0
    Thanked 3 Times in 2 Posts
    Time Online
    7 Hours 3 Minutes 33 Seconds
    Avg. Time Online
    38 Minutes 10 Seconds
    Rep Power
    0

    Default

    Bhoot Khoob

  18. The Following 2 Users Say Thank You to Zuums For This Useful Post:

    Pappu Ji (18-04-2018), suhail502 (Yesterday)

  19. #30
    shubi's Avatar
    shubi is offline Khaas log
    Join Date
    Jun 2017
    Location
    Gulgasht, Multan, Punjab, Pakistan
    Age
    31
    Posts
    147
    Thanks
    627
    Thanked 95 Times in 65 Posts
    Time Online
    21 Hours 54 Minutes 10 Seconds
    Avg. Time Online
    4 Minutes 20 Seconds
    Rep Power
    16

    Default

    Too Hot

    and now wait for more...

  20. The Following 2 Users Say Thank You to shubi For This Useful Post:

    Pappu Ji (20-04-2018), suhail502 (Yesterday)

Page 3 of 4 FirstFirst 1234 LastLast

Bookmarks

Posting Permissions

  • You may not post new threads
  • You may not post replies
  • You may not post attachments
  • You may not edit your posts
  •