Page 4 of 5 FirstFirst 12345 LastLast
Results 31 to 40 of 45

Thread: پپو جی کی آب بیتاں

  1. #31
    Pappu Ji is offline Aam log
    Join Date
    Feb 2015
    Posts
    13
    Thanks
    31
    Thanked 59 Times in 8 Posts
    Time Online
    4 Days 15 Hours 44 Minutes 38 Seconds
    Avg. Time Online
    5 Minutes 37 Seconds
    Rep Power
    6

    Default

    آپ سب دوستوں کا کہانی پسند کرنے کا بہت شکریہ ۔ امید ہے کہ آپ سب دوستوں کو آگے بھی یقینا یہ کہانی مزید پسند آئے گی ۔ شکریہ
    https://www.facebook.com/pappu.ji.54

  2. The Following 3 Users Say Thank You to Pappu Ji For This Useful Post:

    Irfan1397 (20-04-2018), shubi (04-05-2018), suhail502 (21-04-2018)

  3. #32
    rana arshad is offline Premium Member
    Join Date
    Mar 2016
    Age
    24
    Posts
    91
    Thanks
    1
    Thanked 101 Times in 57 Posts
    Time Online
    3 Days 20 Hours 30 Minutes 12 Seconds
    Avg. Time Online
    6 Minutes 57 Seconds
    Rep Power
    13

    Default

    papu g itna acha likh rhy ho lekin trsa trsa kr update dy rhy ho

  4. The Following 3 Users Say Thank You to rana arshad For This Useful Post:

    Pappu Ji (21-04-2018), shubi (04-05-2018), suhail502 (21-04-2018)

  5. #33
    Pappu Ji is offline Aam log
    Join Date
    Feb 2015
    Posts
    13
    Thanks
    31
    Thanked 59 Times in 8 Posts
    Time Online
    4 Days 15 Hours 44 Minutes 38 Seconds
    Avg. Time Online
    5 Minutes 37 Seconds
    Rep Power
    6

    Default

    Quote Originally Posted by rana arshad View Post
    papu g itna acha likh rhy ho lekin trsa trsa kr update dy rhy ho
    رانا صاحب تعریف کا شکریہ ، اور جو چیز ترس کے ملتی ہے اس کا مزہ ہی اور ہوتا ہے ۔ ؒ خیر یہ تو مزاق تھا ۔ اصل میں بہت پرانی بات ہے تو بہت باتیں یاد کر کے لکھنی پڑتی ہیں اور پھر کافی بار ایڈٹ بھی کرنی پڑتی ہیں ۔ پھر جب بھی ٹائم ملتا ہے لکھ لیتا ہوں ، کبھی تو 2 ، 3 دن بھی نہیں لکھ پاتا ہوں ۔ بحرحال کہانی پوری کرونکا اور درمیان میں نہیں چھوڑوں گا ،
    https://www.facebook.com/pappu.ji.54

  6. The Following 3 Users Say Thank You to Pappu Ji For This Useful Post:

    ruldguld123 (22-04-2018), shubi (04-05-2018), suhail502 (21-04-2018)

  7. #34
    ruldguld123 is offline Premium Member
    Join Date
    Sep 2015
    Posts
    197
    Thanks
    1,375
    Thanked 283 Times in 145 Posts
    Time Online
    1 Week 23 Hours 38 Minutes 57 Seconds
    Avg. Time Online
    11 Minutes 33 Seconds
    Rep Power
    23

    Default

    Bohat umda story he papu ji. Aik he nishast me parh k maza a gya. Ab to rozana subh sham forum p ana pare ga is shahkar story ko parhne k lye. Please update zara jaldi date rahen.

  8. The Following User Says Thank You to ruldguld123 For This Useful Post:

    Pappu Ji (24-04-2018)

  9. #35
    Pappu Ji is offline Aam log
    Join Date
    Feb 2015
    Posts
    13
    Thanks
    31
    Thanked 59 Times in 8 Posts
    Time Online
    4 Days 15 Hours 44 Minutes 38 Seconds
    Avg. Time Online
    5 Minutes 37 Seconds
    Rep Power
    6

    Default

    Quote Originally Posted by ruldguld123 View Post
    Bohat umda story he papu ji. Aik he nishast me parh k maza a gya. Ab to rozana subh sham forum p ana pare ga is shahkar story ko parhne k lye. Please update zara jaldi date rahen.

    شکریہ گولڈ کہانی پسند کرنے کا ۔
    https://www.facebook.com/pappu.ji.54

  10. #36
    Woodman's Avatar
    Woodman is offline Premium Member
    Join Date
    May 2012
    Posts
    468
    Thanks
    1,036
    Thanked 2,616 Times in 415 Posts
    Time Online
    1 Week 1 Day 4 Hours 58 Minutes 8 Seconds
    Avg. Time Online
    5 Minutes 21 Seconds
    Rep Power
    301

    Default

    Update please

  11. The Following User Says Thank You to Woodman For This Useful Post:

    Pappu Ji (26-04-2018)

  12. #37
    Pappu Ji is offline Aam log
    Join Date
    Feb 2015
    Posts
    13
    Thanks
    31
    Thanked 59 Times in 8 Posts
    Time Online
    4 Days 15 Hours 44 Minutes 38 Seconds
    Avg. Time Online
    5 Minutes 37 Seconds
    Rep Power
    6

    Default

    قسط نمبر3



    اگلے دن پھر مائیرا کا فون آ گیا ، وہ بہت خوش لگ رہی تھی ۔ کہتی کہ پپو جی بہت مزا آیا ۔ میں تو ابھی تک اس خمار سے باہر ھی نہیں نکلی ۔ بلکہ ابھی تک تمہارا لنڈ اپنی پھدی میں ہی محسوس ہو رہا ہے ، کاش اس ٹائم تم میرے پاس ہوتے تو میری پھدی کو ٹھنڈا کر دیتے ۔ میں بھی بہت خوش تھا ایک کنواری پھدی لے کے ، بھلا کون ظالم ہے جو خوش نہیں ہوگا جس کو تازی تازی ایک کنواری پھدی چودنے کو ملی ہو ۔ تو میں نے کہا کہ کل تو چونکہ ٹائم کم تھا اور پہلی بار تھا اور میں نہیں چاہتا تھا کہ تمہیں زیادہ درد ہو اس لیے میں نے بس ایک بار ہی تمہاری پھدی لی ۔ ویسے اب مائیرا بھی سیکسی باتیں کر کے خوش ہوتی تھی ، کہتی کہ پپو جی تمہارا لنڈ تو بہت مزے کا ہے ۔ منہ میں لے کہ بہت مزا ایا ۔ اور لنڈ سے جو پانی( مذی ) نکلا تھا وہ بھی ٹیسٹی تھا ، دل کرتا تھا کہ کبھی منہ سے ہی نا نکالوں ۔ تم ایسا کرو کہ اپنا لنڈ کاٹ کے مجھے دے دو ۔ کبھی میں منہ میں لوں اور کبھی پھدی میں ۔ اور لنڈ تو میں اپنی پھدی میں ہر وقت ڈال کے رکھوں گی ۔ وہ کہتی کہ اگلی بار ہم اور اچھی طرح اور مختلف سٹائل میں سیکس کریں گے ۔





    پھر ہماری تقریبا روزانہ ہی بات ہونے لگ گئی اور زیادہ وقت سیکس پر ھی ڈسکشن ہوتی تھی ۔ جس سے مائیرا کی سیکس کے متعلق جھجک بلکل ہی ختم ہو گئی ۔ اس نے اپنے پسندیدہ سٹائل کے بارے میں بتایا کہ اسے ڈوگی سٹائل بہت پسند ہے ، اور یہ بھی کہ اسے 69 پوزیشن بہت اچھی لگتی ہے ، اس دوران ہم فون پر بھی سیکس کر لیتے تھے ۔ جس سے وہ کچھ ٹھنڈی ہو جاتی تھی لیکن وہ ملنے کے لیے بے تاب تھی لیکن کچھ میری غم روزگار کی مجبوریاں تھیں اور کبھی اس کو ٹائم نا ملتا ۔ ایک بار موقع ملا تو مائیرا کو مینسز ہو رہے تھے ۔ اس طرح دن گزرتے گئے آخر کار کوئی 3 ماہ کے بعد ہمیں دوبارہ ملنے کا موقع ملا ۔ تو میں نے مائیرا کے لیے ایک گفٹ بھی لے لیا ۔ اور مائیرا کو بھی کہا کہ میں نے اس کے لیےایک گفٹ لیا ہے لیکن بتایا نہیں کہ کیا ہے یہ اس کے لیے ایک سرپرائیز گفٹ تھا ۔ اس نے بہت پوچھا لیکن میں نے پھر بھی نہیں بتایا ۔

    آخر ایک دن وہ لوگ یعنی مائیرا اور حرا ملنے آ گئے ۔ کچھ دیر ہم نے باتیں کی ان کی خاطر تواضع بھی کی ۔ جب ہم لوگ کھا پی کے فارغ ہوئے تو حسب معمول شہزاد حرا کو لے کہ دوسرے روم میں چلا گیا ۔ اب میں اور مائیرا اکیلے رہ گیے ۔ آج مائیرا نے ریڈ کلر کا سوٹ پہنا ہوا تھا ۔ جس پر بہت ہی خوبصورت ہاتھ کی کڑھائی ہوئی وی تھی ۔ ریڈ سوٹ میں مائیرا کا گورا رنگ اور بھی سرخ ہو گیا تھا ۔ مائیرا آج بہت خوبصورت اور سیکسی لگ رہی تھی ۔ کہ دل چاہ رہا تھا کہ ٹائم ضایع نا کروں اور دبوچ لوں اور ۔ ۔ ۔ ۔ پھر مائیرا نے پوچھا کہ پپو جی میرا سرپرائیز گفٹ کہاں ہے ۔ تو میں نے صوفے کے پیچھے سے ایک پیکٹ نکال کے اس کو دیا اور کہا کہ دیکھ لو ۔ اس نے پیکٹ کھولا تو اس میں ایک امپورٹد برانڈ کی میرون کلرکی ٹرانسپیرنٹ برئیزیر اور پینٹی تھی ۔ مائیرا نے دیکھ کے پہلے تو شرمائی پھر کہا کہ پپو جی ۔ ۔ ۔ ۔ یہ کیا لے آئے ہو ۔ پھر کہتی کہ لیکن ہے بہت خوبصورت ۔ میں نے کہا کہ جب پہنوگی تو اور زیادہ خوبصورت لگے گی ۔ چلو مجھے پہن کے دکھاو ۔ تو وہ لے کے واش روم میں جانے لگی تو میں نے اس کا ہاتھ پکڑ کے روک لیا اور کہا کہ میرے سامنے ہی چینج کرو نا ۔ تو وہ بولی کہ نہیں شرم آ رہی ہے میں چینج کر کے آتی ہوں اور واش روم چلی گئی ۔ ویسے یہ بات مجھے سمجھ نہیں آئی کہ اب شرمانا کیسا ۔



    تھوڑی دیر بعد دروازہ کھلنے کی آواز آئی تو میں نے واش روم کی طرف دیکھا تو دیکھتا ہی رہ گیا ۔ مائیرا صرف برا اور پینٹی میں ٹانگ پر ٹانک چڑھا کے دروازے سے ٹیک لگا کے کھڑی ہو گئی ۔ گورے بدن پے میرون کلر کی پینٹی اور برئیزیر آففففف کیا قیامت لگ رہی تھی اس وقت۔ میں تو مائیرا کے حسن میں مسحور ہی ہو گیا ۔ پلکیں چھپکائے مائیرا کے حسن کو دیکھتا ہی رہا ۔ میرون ٹرانسپیرنٹ برئیزر جس نے مائیرا کو 36 سائیز کے مموں کو آدھا کور کیا ہو اتھا اور نپلز کی جگہ پے بہت خوبصورت پھول بنے ہوئے تھے جس سے نپلز اور کچھ سائیڈز کور تھی اور پینٹی پے پھدی کے آگے بھی ایک پھول تھا ۔ جس سے پھدی کے ہونٹ چھپ گئے تھے ۔ میرے منہ سے بے ساختہ واوووووو ۔ ۔ ۔ ۔ نکل گیا ۔ میں نے کہا کہ مائیرا تم تو اس وقت ایٹم بمب لگ رہی ہو ۔ پھر وہ بڑی ادا سے ماڈل کے سٹائل میں چلتی ہوئی میرے پاس آگئی اور بڑی ہی ادا سے مڑی اور جیسے ہی وہ مڑی تو میرا سانس رک سا گیا کیونکہ پینٹی کی پیچھے صرف ایک ڈوری تھی جو کہ مائیرا کی گانڈ کے اندر گھسی ہوئی تھی اور باقی کے سارے یپس ننگے تھے ۔ اُفففففففف کیا نظارہ تھا ۔ جیسے ہی وہ سیدھی ہوئی میں نے فورا سے پہلے اس کو اپنی بانہوں میں لے لیا اور اس کے ہونٹوں پے قبضہ کر لیا ۔ اور بے تحاشہ ہونٹوں کو چومنے لگا ۔ کبھی اوپر والا اور کبھی نیچھے والا ہونٹ اپنے ہونٹوں سے چوم رہا تھا ۔ بلکہ کاٹ رہا تھا ۔ پھر میں نے اس کی زبان کو اپنے منہ میں لیا اور چوسنے لگ گیا جس سے مائیرا مدہوش سی ہو گئی ۔ اور میری بانہوں میں جھول سی گئی ۔ اس کے جسم سے بھینی بھینی خوشبو آرہی تھی ۔ اس کے 36 کے ممے میرے سینے میں کھبے ہوئے تھے ۔ جس سے میرے لنڈ نے اکڑنا شروع کر دیا تھا ۔ وہ میرے سر میں اپنی انگلیاں پھیر رہی تھی ۔ جس سے مجھے بہت مزا آرہا تھا ۔ پھیر میں نے مائیرا کی گردن پے اپنے ہونٹ لگا دیے اور چاٹنے کے انداز میں اوپر نیچھے پھیرنے لگا ۔ اس کی گردن میرے تھوک سے گیلی ہو گئی تھی ۔ اب اس کے منہ سے ہلکی ہلکی آوازیں نکلنی لگی تھی جس سے مجھے بھی جوش چڑھ رہا تھا ۔



    پھر میں نے اس کو گھما دیا اور اب اس کی کمر میرے سینے سے لگی ہوئی تھی اور گانڈ میرے اکٹرے ہوئے لنڈ کے اوپر آگئ تھی ، میں اب اس کی گردن پر چومنا شروع کیا اور پھیر شولڈرز پے کس کرنے لگا ۔ اور ہاتھ آگے کر کے اس کے مموں کو بھی دبا رہا تھا ۔ کیا زبردست سین تھا اُس وقت ، مجھے آج بھی وہ سین وہ لمحہ یاد ہے ۔ اب میں اس کو چومتا ہوا نیچے آنے لگا اور برئیزیر کے ہک کے آس پاس چومتا رہا ۔ اور پھیر کمر کی لکیر کو چومتا ہوا گانڈ پے آ گیا اور گھٹنوں کے بل بیٹھ کہ گانڈ کے دونوں ابھاروں پے ہاتھ رکھ کے زبان سے چاٹنے لگا ، دونوں گورے گورے بے داغ ہپس بلکل ریشم کی طرح تھے ۔ میرے زبان ان پے پھسل رہی تھی ، مائیرا کے منہ سے نکلنے والی آوازیں اب تیز ہو گئی تھی ۔ پھر میں کھڑا ہوا اور اپنی شرٹ ، بنیان اور جینز کو اُتار دیا اب میں صرف انڈر وئیر میں تھا ۔ پھر میں نے مائیرا کو بیڈ پے لٹا دیا اور خود اس کے اوپر آکے لیٹ گیا ۔ میرا لنڈ انڈروئیر میں پھٹنے والا ہو رہا تھا ۔ جیسے ہی میں مائیرا کے اوپر آیا تو میرا لنڈ اس کی پھدی کے اوپر ٹچ ہوا ۔ جس سے مائیرا کے جسم نے ایک جھٹکا لیا ۔ اب میں نے مائیرا کے ہونٹوں کو چومنا شروع کیا اور دونوں گالوں سے ہوتا ہوا گردن پے آ گیا ، گردن پے کس کی پھر نیچھے بوبز کے اوپری حصے کو چومنا شروع کیا ، اب پھر مائیرا کی سیکسی آوازیں نکل رہی تھی ۔ پھر میں نے برئیزیر کو نیچھے کیا اور پنک پنک نپلز کو چوسنا شروع کیا ۔ جس سے اس کی سیکسی آوازوں میں اضافہ ہو گیا ۔ اور ساتھ ساتھ وہ ہلکے ہلکے کانپنے بھی لگ گئی ۔ میں نے اس کے مموں اور نپلز کو چوس چوس کے لال کر دیا اور مموں پر نشانیاں بھی بنا دیں ۔ تاکہ وہ جب بھی نشان کو دیکھے تو اس پیار میں ہی گم رہے ۔ پھر میں نیچھے آیا اور پیٹ پے اپنی زبان سے پیار کو نقش کرتا گیا ۔ پھر بیلی کے سوراخ کے گرد زبان کو گھاتا رہا جس سے اس کے پیٹ نے جھر جھری لی آآآآہ ہ ہ ہ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ کتنا مزا آرہا تھا ۔ اُففففف ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ اس کا پیٹ ہلکا ہلکا ہل رہا تھا اور میں مزے سے اس کی بیلی پر کس کرتا رہا ۔ پھر تھوڑا نیچھے ہوا بیلی اور پھدی کے بیچ کے حصے کو ہر طرف سے چومتا چاٹتا رہا ۔ مائیرا کا نرم نرم گرم گرم جسم مجھے بھی گرم کر رہا تھا ۔



    پھر میں نے اس کو الٹا کر دیا اور اس کی گانڈ پر بیٹھ گیا ۔ اور گردن پے کس کرتے ہوئے شولڈرز پے آ گیا ۔ بھر بھرے شولڈرز کو چومتے ہوے براء کے ہک پے آ گیا اور براء کے ہک کو کھول دیا ۔ اب اس کی بے داغ ، شفاف ، گوری ، ننگی کمر میرے سامنے تھی ۔ میں کمر کی لکیر پے ہونٹوں کو پھیرتے ہوئے نیچھے ہو گیا اور اس کی ٹانگوں کے بیچ بیٹھ گیا اور گانڈ پے زبان سے پیار کرتا رہا ۔ پھر تھاییز پے کس کرتے ہوئے پنڈلییوں پر آ گیا تھا ۔ کیا مزا تھا اس کے جسم کے ہر حصے کا ذائیقہ بہت ہی زبردست تھا ۔ پھیر میں دوبارہ اس کی گانڈ پر آگیا اور گانڈ پے زبان پھیرنے لگا ۔ تو اس کی گانڈ ہلکی ہلکی ہلنے لگی ۔ واوووو ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ کیا سین تھا ۔



    میری برداشت اب ختم ہونے لگی تھی تو میں نے اب اس کو سیدھا کیا اور برا کو جسم سے الگ کر دیا اور پینٹی کو بھی اُتار دیا ۔ میں مائیرا کی پھدی کو چاٹنے کے لیے جیسے ھی اس کی ٹانگوں کے درمیان آیا تو اس ے مجھے روک دیا اور کہا کہ لیٹ جاو ۔ تو میں شرافت سے لیٹ گیا اور پھر وہ میرے اوپر آگئی اور میرے ہونٹوں کو کس کرتے ہوئے میرے نپلز کو دانتوں سے کاٹنے لگی ۔ جس سے مجھے بہت مزا آیا ۔ اور میرے منہ سے بھی سیکسی آوازیں نکلنے لگی جس کو سن کے مائیرا کو بھی جوش چڑھ گیا اور وہ مزید جنون سے مجھے پیار کرنے لگ گئی ۔ پھیر تھوڑی دیر نپلز پر کس کرنے کے بعد میرے پیٹ پے بیلی پر کس کرگے نیچے آ گئی اور میرے انڈر وئیر کو دونوں ہاتھوں سے پکڑا اور مجھے تھوڑا اوپر ہونے کا کہا اور جیسے ہی انڈروئیر نیچھے ہوا تو میرا فل کھڑا ہوا لنڈ ایسے باہر نکلا جیسے کسی قید سے آزاد ہوا ہو ۔ پھر اس نے انڈروئیر سارا اتار دیا اور میرے لنڈ کو بہت پیار سے دیکھنے لگ گئی ۔ میں اس کی آنکھوں میں ہی دیکھ رہا تھا ۔ اس کی آنکھوں میں چمک تھی جیسے کسی بہت ہی پیاری چیز کو دیکھ رہی ہو ۔ پھر بولی کہ پپو جی اس لنڈ میں کیا نشہ ہے ۔ میری تو راتوں کی نیند ہی اُڑا دی ہے اس ظالم نے ۔ خواب میں بھی تمہارا لنڈ اپنی پھدی میں محسوس کرتی ہوں ۔ اور پھر اس نے میرے لنڈ کی ٹوپی کو بہت ہی پیار سے اپنے منہ میں لے لیا اور زبان سے لنڈ کے سوراخ پر پھیرنے لگی ۔ اُفففففف ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ آآآآآ ہ ہ ہ ہ ہ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ میرے منہ سے سیکسی آوازیں نکلنا شروع ہو گئی جس سے مائیرا کو مزید جوش چڑھا اور ا سنے آدھے سے زیادہ لنڈ کو اپنی منہ میں لے لیا ۔ اور منہ کو اوپر نیچھے کرنے لگی ۔ میں تو اس وقت ہواووں میں اُڑ رہا تھا ۔ پھر میں نے اس کو کہا کو ایسے ھی اپنی گانڈ میری طرف کر لے تو وہ سمجھ گئی کہ اب کیا کرنا ہے ۔ اس سین یہ تھا کہ اس نے اپنی ٹانگیں میرے سر کے دائیں بائیں رکھ لیں تھی اور پھدی کو میرے منہ پے سیٹ کر لیا تھا اور لنڈ کو اپنے منہ میں لے رکھا تھا اس کی پھدی سے گرم گرم پانی رس رہا تھا اور پھدی کے ہونٹوں پر چمک رہا تھا ۔ اس کی پھدی سے کیا زبردست مہک آ رہی تھی جس سے میرے شہوت میں مزید اضافہ ہو گیا تھا ۔ ا ب میں نے اس کی پھدی کے اندر زبان ڈال دی تو اس نے لنڈ کو منہ سے نکالا اور تیز سسکاری ی ی ی ی ی ۔ ۔ ۔ ۔ لی ۔ سسسسسسسس۔ ۔ ۔ ۔ ۔ اس کی سسکاری سن کے میں نے اپنی زبان اور اندر ڈال دی اور زبان سے پھدی کو چودنے لگا ۔ اور میں نے اپنے ہاتوں سے اس کے ممے پکڑے ہوئے تھے اور کبھی ممے اور کبھی نپلز مسل رہا تھا جس سے وہ بے حال ہو رہی تھی پھر اس نے بھی میرے لنڈ کو قلفی کی طرح چوسنا شروع کر دیا ۔ اور تیز تیز منہ چلاتی رہی ، ادھر میں بھی زور زور سے زبان چلا رہا تھا پھر تھوڑی دیر بعد ہی مائیرا کا جسم اکڑنے لگا اور اس نے لنڈ اپنے منہ سے نکالا اور اپنے ہاتھ سے اپنی پھدی کے دانے کو مسلنے لگی اور بہت تیز سیکسی آوازیں نکالتی رہی ۔ اور پھر اس کے جسم نے ایک زوردار جھٹکا لیا اور اس کی پھدی نے گرم گرم نمکین مزیدار پانی میرے منہ پے نکال دیا ۔ اور جب سارا پانی نکل گیا تو وہ سیدھی ہو کے لیٹ گئی ۔



    میں نے ٹشو سے اپنا منہ صاف کیا اور مائیرا کے اوپر آ گیا ابھی اس کی پھدی اس کے ہی پانی سے بھری ہوئی تھی تو میں نے فورا اپنا لنڈ اس کی گیلی پھدی میں ڈال دیا ابھی بھی اس کی پھدی کافی ٹائیٹ تھی ۔ کیونکہ ابھی تک صرف ایک بار ہی میرا لنڈ اس کے اندر گیا تھا ۔ اور آج دوسری بار اس پھدی میں لنڈ جا رہا تھا اور وہ بھی میرا ہی تھا ، مجھے تھوڑا زور لگانا پڑا تو میرا لنڈ کچھ اندر چلا گیا ۔ اس کی پھدی اندی سے شدید گرم ہو رہی تھی جیسے تندور میں آگ لگی ہوئی ہو ۔ مجھے اپنا لنڈ بھی جلتا ہوا محسوس ہو رہا تھا ۔ پھر میں نے مائیرا کو ہونٹوں کو اپنے ہونٹوں میں قید کیا اور ایک زور کا جھٹکا لگایا اور پورا 6 انچ ک لنڈ پھدی میں گھسا دیا جو جا کہ اس کی بچہ دانی پے ٹچ ہوا۔ جیسے ہی میرا لنڈ پورا اند گیا تو مائیرا کے منہ سے چیخ نکلی تھی جو کہ میرے منہ میں ہی دب گئی اور وہ اب نیچھے سے مچلنے لگی تھی ۔ میں اس کو کس کر رہا تھا اور ہاتھوں سے اس کے ممے اور نپلز کو مسل رہا تھا جس سے پھر اس کو مزا آنے لگا اور اس نے اپنی گانڈ ہلا کے مجھے ہلنے کا اشارہ دیا ۔ میں نے اپنا لنڈ اس کی پھدی سے ٹوپی تک باہر نکالا اور پھر اندر کر دیا ۔ مائیرا کے منہ سے آہ نکل گئی ۔ اور پھر میں نے اپنی رفتار کچچ تیز کر دی ۔ وہ بھی ساتھ ساتھ ہل رہی تھی ۔ پھیر میں نے اس کو کہا کہ الٹی ہو جائے ۔ اور اسکو ڈوگی سٹائل میں کر دیا ۔ اب اس کی سیکسی گانڈ میرے لنڈ کے سامنے تھی میں نے اسکی گانڈ پر ہاتھ پھیرا اور اپنا لنڈ پیچھے سے اسکی پھدی میں ڈال دیا ۔ اور گھسے مارنے شروع کیے ۔ میرے ہر گھسے پر اس کے منہ سے آآہ ہ ہ ہ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ اُفففففففف ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ آآآآ ہ ہ ہ ہ ہ ہ ہ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ مممممممممممممم کی آوازیں نکل رہی تھی ۔ مجھے اس کو چودتے ہوئی کوئی 15 منٹ ہوئے تھے کہ مجھے اپنے لنڈ میں سنسناہت محسوس ہونے لگی ۔ میں نے اسکی پھدی میں گھسوں کی رفتار بڑھا دی وہ بھی اپنے ہاتھ سے دانے کو مسل رہی تھی اور پھر اس نے ایک بار پھر جھٹکا کھایا اور اپنا سارا پانی نکال دیا جو کہ مجھے اپنے لنڈ پر محسوس ہوا ۔ اور میں نے بھی اپنے گھسوں کی رفتار اور تیز کر دی اور پھر مجھے لگا کہ میرے جسم کا سار اخون میرے لنڈ میں آ گیا ہے اور میرا پانی نکلے والا ہوا تو میں نے فورا اپنا لنڈ باہر نکالا اور مُٹھ مارنے لگا اور سارا پانی مائیرا کی گوری سیکسی گانڈ پے نکال دیا ۔ مجھے ایسا لگا کہ جیسے سکون سا آ گیا ہو۔ مائیرا تو ایسے ہی نیچے ہوکہ الٹی ہی لیٹ گی ۔ میں بھی الٹا ہی اس کے ساتھ لیٹ گیا اور اپنا ہاتھ مائیرا کی کمر پر رکھ لیا ۔



    10 ، 15 منٹ ایسے ہی لیٹے رہنے کے بعد میں اٹھا اور واش روم چلا گیا اور لنڈ کو اچھی طرح صاف کیااور باہر آ گیا ۔ مائیرا ابھی تک ویسے ھی اُلٹی لیٹی ہوئی تھی ۔ اس کا بھرا بھرا گورا سیکسی جسم مجھے پھر سے اس کی پھدی مارنے کی دعوت دے رہا تھا ۔ میں اس کے پاس آیا اور ٹشو سے اس کی کمر اچھی طرح صاف کی اور اس کو سیدھا کیا اور اس کے مموں پر اپنا سر رکھ کے لیٹ گیا ۔ اور اپنی زبان اس کے مموں پے پھیرنے لگا ، جس سے مائیرا کے جسم میں پھر سے حرارت پیدا ہونے لگی ۔ کوئی 12، 20 منٹ تک ایسے ہی لیٹنے کے بعد مائیرا نے مجھے سیدھا کیا اور جھک کے میرے سوئے ہوئے لنڈ کو اپنے منہ میں لے لیا ۔ مائیرا کے منہ میں جاتے ہی لنڈ نے ایک جھرجھری سی لی اور پھر مائیرا نے میرے سوے ہوئے لنڈ کو پورا منہ میں لے لیا اور بہت پیار سے چوسنے لگی ۔ اب اسکی پوزیشن یہ تھی ک وہ الٹی ہو کہ میرے لنڈ کو چوس رہی تھی اور اسکی گانڈ میرے منہ کے پاس تھی تو میں نے اپنی انگلی اسکی پھدی میں ڈال دی اور پھدی کے اندر اوپر والا حصہ جو کہ کھردرا ہوتا ہے اس کو رگڑنا شروع کر دیا ۔ تو مائیرا کہ منہ سے ایک مزے والی کراہ نکل گئی ۔ اب میرا لنڈ اس کہ منہ کی گرمی سے کھڑا ہونے لگا تھا ، جیسے جیسے میرا لنڈ اکڑ رہا تھا مائیرا بھی تیز تیز منہ چلا رہی تھی لنڈ پر ۔ پھر تھوڑی دیر میں ہی میر النڈ فل اکڑ گیا تو مائیرا کے منہ میں پورا نہی آیا تو وہ آدھے سے کچھ زیادہ کو ہی چوسنے لگی ۔ ادھر میں اسکی پھدی میں مسلسل انگلی کر رہا تھا ۔

    پھر وہ اچانک رکی اور سیدھی ہو کہ اپنی ٹانگیں میرے دایں بائیں رکھی اور لنڈ کو اپنی پھدی پر ہلکے ہلکے رگڑنے لگی اور پھر وہ اوپر کو اٹھی اور آرام سے لنڈ کو اپنی پھدی پر سیٹ کر کے لنڈ پر بیٹھ گئی ۔ اس کی آنکھیں مزے سے بند تھیں ۔ جیسے جیسے میرا لنڈ اس کی پھدی میں گھستا جا رہا تھا تو مزا لنڈ سے ہوتا ہوا میرے سارے بدن میں پھیل رہا تھا ۔ پھیر وہ ساری میرے لنڈ پر بیٹھ گئی ۔ تو میں نے دیکھا کہ میرا لنڈ اسکی پھدی میں گم ہو گیا ہے ۔ میں نے پوچھا کہ میرا لنڈ کہاں گیا تو وہ شرارتی لہجے میں بولی کہ میں نے کاٹ لیا ہے اب اپنے ساتھ ہی لے جاوں گی تا کہ بعد میں تنگ نا ہونا پڑے ۔ اب وہ میرے لنڈ پر اوپر نیچے ہونے لگی ۔ پہلے تو آرام آرام سے کر رہی تھی پھر اسکی رفتار میں تیزی آ گئی ۔ میں نے بھی اسکے ممے اپنے منہ میں لے لیے اور اور نپلز کو چوسنا شروع کر دیا ۔ اس سے مائیرا کی رفتار میں اور شدت آ گئی اور وہ فل جوش میں آکے اوپر نیچھے ہونے لگی ۔ یہ سٹائل مجھے بہت فیسی نییٹ کرتا ہے کیونکہ اس میں جسم زیادہ قریب اور بلکل آپس میں جڑ جاتے ہیں ، اور لنڈ بھی بلکل جڑ تک پھدی میں چلا جاتا ہے ۔ اور محنت بھی کم لگتی ہے اور اس سے ٹائیمنگ بھی زیادہ ہو جاتی ہے ۔ تو کبھی آرام سے اور کبھی تیز تیز ہمیں اس سٹائیل میں 10 منٹ ہو گئے تھے تو پھر مائیرا نے جوش میں تیز تیز اچھلنا شروع کر دیا میں اور اس کی آنکھیں مزے سے بند ہو گئی تھیں ۔ میں بھی اس کے کبھی ایک ممے ہاتھ سے دباتا اور کبھی دوسرے ممے کو منہ میں لے کے چوس رہا تھا ۔ اور پھر مائیرا کی پھدی نے ایک بار پھر میرے لنڈ پر اپنے پانی کی برسات کر دی ۔ اور پھر آہستہ آہستہ اس کی رفتار بھی کم ہوتے ہوتے رک گئی اور وہ میرے سینے پر سر رکھ کہ لیٹ گئی اور ہانپنے لگی ۔



    میرا لنڈ ابھی تک اس کی پھدی میں سر اُٹھا کے کھڑا تھا ۔ پھر میں نے مائیرا کو کروٹ کے بل لٹایا اور خود اس کے پیچھے لیٹ گیا اور پیچھے سے لنڈ اس کی پھدی میں ڈال دیا ۔ اور خود اس کے ساتھ جڑ کے لیٹ گیا کہ میرا لنڈ مائیرا کی پھدی میں تھا اور میرا سینہ اس کی کمر سے چپکا ہوا تھا اور ہاتھ سے میں مائیرا کے مموں کو دبا رہا تھا ۔ اور پھر ایسے ہی اسے چودتے ہوے 10 منٹ ہوئی ہونگے کہ مجھے بھی اپنے لنڈ پے چیونٹیاں رینگتی ہوئی محسوس ہوئی تو میں نے دھکے لگانے کی رفتار میں اضافہ کر دیا اور زور زور سے لنڈ پھدی میں اندر باہر کرنے لگا ، اور پھر کچھ ہی دیر میں جب مجھے لگا کہ اب میرا پانی نکلنے والا ہے تو میں نے لنڈ باہر نکالا اور سارا پانی اس کی پھدی کے اوپر ہی نکال دیا ۔ اور پھر لنڈ اس کی ٹانگ میں دبا کے لیٹ گیا ۔ اتنے میں مرے موبائل پر شہزاد کا میسج آیا کہ کیا پروگرام ہے ۔ کب تک فری ہو جاو گے ۔ تو میں نے اس کو کہا کہ 15 منٹ تک آ جانا۔ اس بار ہم نے ڈیسائیڈ کیا تھا کہ آنے سے پہلے میسج کر کے کنفرم کر لیں گے ۔ پھیر میں نے مائیرا کو اٹھایا اور ہم نے واش روم میں جا خود کو صاف کیا مائیرا نے اپنے کپڑے پہنے ، اور میں نے بھی باہر آکے اپنے کپڑے پہن لیے ۔ اور پھر صوفے پر بیٹھ کہ باتیں کرنے لگے ۔



    مائیرا نے مجھے کہا کہ پپو جی آج بہت مزا آیا ۔ وہ 3 بار فارغ ہوئی تھی اور میں 2 بار۔ وہ آج اس لیے بھی خوش تھی کہ اس نے اپنی پسندیدہ پوزیشنز میں سیکس کیا تھا ۔ اس نے گفٹ کا بھی شکریہ ادا کیا ۔ اور پھر شزاد اور حرا بھی آ گئے ہم نے کچھ دیر آپس میں باتیں کی اور پھر مائیرا اور حرا چلے گئے ۔





    دوستو مائیرا کے ساتھ میرا سیکس کا تعلق تو اس کی شادی تک چلا ، یعنی کوئی 3 سال اور ۔ ان 3 سالوں میں ہم نے متعد د بار سیکس کیا ۔ لیکں مائیرا کی شادی کے بعد کبھی اس سے سیکس نہیں کیا ۔ مگر اتنے سال گزرنے کے بعد آج بھی وہ میری بہت اچھی دوست ہے ۔ اپنی ہر پریشانی اور کوئی بھی مسئلہ ہو تو مجھ سے ضرور ڈسکس کرتی ہے ۔ اور کہتی ہے کہ اس نے اپنی زندگی کی بہترین سیکس لائف میرے ساتھ انجوائے کی ہے۔ اور ان 3 سالوں میں مجھے مزید ایک آنٹی اور ایک لڑکی سے بھی سیکس کرنے کا موقع ملا ۔ میرے خیال میں مائیرا کے ٹاپک کو فلحال یہاں ہی بریک لگاتے ہیں ۔ اور دوسرا سیکس ایکسپیرینس شروع کرتا ہوں ۔ بیچ میں اگر کہیں لگا تو ایک قسط پھر مائیرا کے ساتھ سیکس پر لکھ دوں گا ۔ لیکن اگر آپ لوگوں نے کہا تو ، ورنہ پھر اسی طرح ہی مزید اوروں کے ساتھ جو سیکس ہوا وہ ہی تحریر کر دوں گا ۔

    https://www.facebook.com/pappu.ji.54

  13. The Following 13 Users Say Thank You to Pappu Ji For This Useful Post:

    abba (30-04-2018), abkhan_70 (26-04-2018), darkhorse (27-04-2018), Irfan1397 (03-05-2018), kitas (13-05-2018), lastzaib (27-04-2018), Lovelymale (28-04-2018), midas1975 (27-04-2018), piyaamoon (28-04-2018), shubi (17-05-2018), Sticky rosho (27-04-2018), teno ki? (28-04-2018), Woodman (27-04-2018)

  14. #38
    farhan403's Avatar
    farhan403 is offline sex ka dewan
    Join Date
    Oct 2015
    Location
    attock
    Posts
    393
    Thanks
    333
    Thanked 567 Times in 264 Posts
    Time Online
    5 Days 5 Hours 4 Minutes 44 Seconds
    Avg. Time Online
    7 Minutes 45 Seconds
    Rep Power
    45

    Default

    Updates kb tak mily gi

  15. The Following User Says Thank You to farhan403 For This Useful Post:

    Pappu Ji (28-04-2018)

  16. #39
    Lovelymale's Avatar
    Lovelymale is offline Premium Member
    Join Date
    Aug 2008
    Location
    Islamabad, Pakistan, Pakistan
    Age
    54
    Posts
    2,037
    Thanks
    14,315
    Thanked 7,166 Times in 1,832 Posts
    Time Online
    2 Weeks 3 Days 7 Hours 23 Minutes 2 Seconds
    Avg. Time Online
    10 Minutes 42 Seconds
    Rep Power
    1050

    Default

    Maira wala episode boht acha raha. Agli wardaton ki stories ka intezar rahay ga. Time pe updates ati rahi to parhnay ka maza aye ga.

  17. The Following 2 Users Say Thank You to Lovelymale For This Useful Post:

    akhan201131 (11-05-2018), Pappu Ji (28-04-2018)

  18. #40
    Irfan1397's Avatar
    Irfan1397 is offline super moderator
    Join Date
    Sep 2011
    Location
    Sahiwal
    Posts
    7,552
    Thanks
    26,261
    Thanked 38,368 Times in 7,339 Posts
    Time Online
    1 Month 2 Weeks 1 Day 2 Hours 37 Minutes 53 Seconds
    Avg. Time Online
    27 Minutes 53 Seconds
    Rep Power
    3131

    Default

    [color= purple]
    پپو جی ایک ماہ میں صرف تین اپڈیٹس !
    کہانی اچھی جا رہی ہے اور کوشش کریں کہ اپڈیٹ زیادہ لیٹ نہ ہو اور کہانی کا مزا برقرار رہے ۔ اگلی قسط کا انتظار ہے ۔
    [/color]

  19. The Following User Says Thank You to Irfan1397 For This Useful Post:

    Pappu Ji (13-05-2018)

Page 4 of 5 FirstFirst 12345 LastLast

Bookmarks

Posting Permissions

  • You may not post new threads
  • You may not post replies
  • You may not post attachments
  • You may not edit your posts
  •